شخصیات

مشتاق احمد یوسفی

مشتاق احمد یوسفی ایک رجحان ساز اور صاحب اسلوب مزاح نگار تھے ۔ ان  کے ہاں مزاح  اور شگفتگی خود لفظوں اور لفظی صورت گری سے معمور تھے۔ ان کا مزاح عام افعالِ انسانی سے پھوٹتا تھا اور تازہ ہوا کے جھونکے کی طرح کشیدہ اعصاب کو ہلکا پھلکا کر دیتا تھا۔  کبھی ان کے فقرے بہت سادہ اور پُرمعنی و سچے ہوتے ہوئے بھی لبوں پر مسکراہٹ بکھیر دیتے تھے حالانکہ سچائی کو اکثریت تلخ گردانتی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ یوسفی کا مزاح باادب تھا، یہ کردار کشی اور شخصی حملو ں سے پاک تھا جس میں جذبات سے عاری پن یا دل آزاری نام کو بھی  نہ تھی۔  ان کے ہاں ح  پھکڑ پن اور ناشائستگی کے بجائے  معنی آفرینی، نکتہ رسی، روانی اور ندرتِ خیال پائی جاتی تھی۔ یوسفی انسانی نفسیات  سے بخوبی واقف تھے اور اپنی تحریر میں اس کو یوں برتتے کہ وہ سبھی کو اپنا ہی بیان محسوس ہوتا۔ یوسفی کی زبان رواں، شائستہ، اور تہذیبی رچاؤ کی حامل تھی ۔ ان کا مشاہدہ بھی گہرا تھا اور وہ  اپنے موضوع سے متعلق تفصیلی معلومات بھی رکھتے تھے اسی لیے مشاہدے اور علم کا یہ امتزاج ایسا مزاح تخلیق کرتا جو لبوں پر بےاختیار ہنسی کے پھول کھلا دیتا۔ مشتاق یوسفی اردو مزاح کو عامیانہ انداز و لطائف سے دور رکھنے والے شاید آخری مزاح نگار تھے ان کی وفات سے ایک عہد کا خاتمہ ہوگیا۔ گوکہ دامنِ اردو کو محدود کرنا یا اس سے یکسر مایوس ہوجانا روا نہیں، امید برقرار رہنی چاہیے یوسفی صاحب جیسے صاحب طرز ادبا کی موجودگی اردو قارئین کے لیے اشد ضروری ہے تاہم یہ بات اپنی جگہ مسلمہ ہے کہ اب کوئی دوسرا  ‘یوسفی’  نہیں مل سکے گا۔

ذیل میں مشتاق احمد یوسفی صاحب کی زندگی اور کام کے حوالے سے کچھ معلومات پیش خدمت ہیں:

نام:

مشتاق احمد یوسفی

تاریخِ پیدائش ، و مقام پیدائش:

4 ستمبر 1921  ریاست ٹونک، راجھستان، ہندوستان

تاریخِ وفات و مقام:

20 جون 2018ء ، کراچی

تعلیم:

ابتدائی تعلیم راجپوتانہ

ایم-اے (فلسفہ) آگرہ یونیورسٹی

ایل ایل بی،  علی گڑھ مسلم یونیورسٹی

پاکستان ہجرت:

تقسیم ہند کے بعد 1950ء میں براستہ کھوکھرا پار  کراچی ہجرت

پیشہ ورانہ سفر:

1946 ء ڈپٹی کمشنر اور ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر، ہندوستان

1950ء بینکر، مسلم کمرشل بینک

1965ء  منیجنگ ڈائریکٹر، الائیڈ بینک

1974ء صدر یونائیٹڈ بینک

1977ء  چیئرمین پاکستان بینکنگ کونسل

1979ء مشیر بی سی سی آئی، لندن

1990ء ریٹائرمنٹ

کتب:

اب تک ان کی پانچ کتابیں شائع ہوچکی ہیں۔

·         چراغ تلے(1961ء)

·         خاکم بدہن (1969ء)

·         زرگزشت(1976ء)

·         آبِ گم  (1990ء)

·         شامِ شعرِ یاراں(2014ء)

اعزازات:

ستارہ امتیاز، ہلالِ امتیاز

کمالِ فن ایوارڈ

آدم جی ایوارڈ برائے:  خاکم بدہن، زرگذشت

بابائے اردو مولوی عبدالحق ایوارڈ

نوشتہ ویب ڈیسک
نوشتہ ہمارے سماج کا کیتھارسس بھی ہے اور ہماری اخلاقی روایات کا امین بھی۔ ہم آزادیِ اظہار کے قائل ہیں تاہم آزادیِ اظہار کے نام پر نفرت کی ترویج کے مخالف بھی۔ ہم ایک صحت مند، معتدل اور متوازن بیانیے کے ساتھ آپ کے ساتھ ہیں۔

اپنی رائے کا اظہار کیجیے